Wed, Feb 24, 2021

مسلمان رمضان کی طرح زندگی گزارنے کا عہد کریں
مفتی عبدالمنعم فاروقی قاسمی کی طرف سے مسلمانوں کو عید کی پُر خلوص مبارک باد

اللہ تعالیٰ نے امت محمدیہ ؐ کو سال میں دوعیدیں عطا فرمائی ہیں ،ایک عید الفطر اور دوسرے عید الاضحی ہے ،یہ دونوں عیدیں دو عظیم عبادتوں کی تکمیل پر دی گئی ہیں ، رمضان المبارک میں روزوں کی ادائیگی ،نماز تراویح کا اہتمام اور اعتکاف کی سنت پر عمل کے نتیجہ میں عید الفطر عطا ہوئی ہے تو عید الاضحی اسلام کے اہم ترین فریضہ حج بیت اللہ کی تکمیل پر ملی ہے ، اسلام کی نظر میں عید کوئی رسمی چیز نہیں ہے کہ اس کے آنے پر منالی جائے بلکہ اس کے ذریعہ ان میں حقیقی بندگی کا مزاج پروان چڑھایا جاتا ہے اور انہیں بتایا جاتا ہے کہ ایک مسلمان کی حقیقی خوشی خدا کی عبادت واطاعت اور خوشنودی حاصل کرنے ہی میں ہے ،عید کے ذریعہ بندوں کے اندر شکر گزاری کا جذبہ پروان چڑھایا جاتا ہے کیونکہ شکر گزار بندے اللہ کو پسند ہیں ،رمضان المبارک کی عبادات کی تکمیل پر اللہ تعالیٰ اپنے بندوں سے بے حد خوش ہوتے ہیں اور عید کے ذریعہ انہیں خوشیوں سے مالا مال کرتے ہیں ، انہیں مغفرت ومعافی کا پروانہ عطا کرتے ہیں چنانچہ حدیث میں ہے کہ عید کے دن صبح ہی سے فرشتے آبادیوں کی ہر گلی ،ہر کوچہ ،ہر بازار اور سڑک کے سِروں پر کھڑے ہوجاتے ہیں اور امت محمدیہ ؐ سے مخاطب ہوکر کہتے ہیں ائے لوگو! اپنے اس رب ِ کریم کی طرف چلو جو تھوڑی عبادت قبول کر لیتا ہے اور زیادہ اجر وثواب دیتا ہے اور بڑے بڑے گناہ معاف کر دیتا ہے ،رب العالمین فرشتوں سے مخاطب ہوکر فرماتے ہیں کہ جب مزدور اپنا کام پورا کر لے تو اس کی جزا کیا ہے ؟ فرشتے عرض کرتے ہیں اسے مزدوری پوری ملنی چاہیے ،چنانچہ خدائے رحمن ورحیم فرشتو ں کو گواہ بناتے ہوئے فرماتے ہیں کہ میرے بندے اور بندیوں نے (مقرر کردہ) فرض کو ادا کیا ،اب وہ گھروں سے دعا کے لئے عید گاہ کی طرف نکلے ہیں ،قسم ہے اپنی عزت کی ، اپنے جلال کی،اپنی بخشش ورحمت کی ،اپنی عظمت شان کی اور اپنی رفعتِ مکان کی کہ میں ان کی دعاؤں کو قبول کروں گا ،پھر فرماتے ہیں اے میرے بندو! اپنے گھروں کو لوٹ جاؤ میں نے تمہیں بخش دیا اور تمہاری برائیوں کونیکیوں میں تبدیل کر دیا،آپ نے ؐ نے فرمایا پس مسلمان عید گاہ سے اس حال میں واپس ہوتے ہیں کہ ان کے سارے گناہ معاف کر دئیے جاتے ہیں ، اس سے بڑھ کر اور کیا چاہئے کہ اللہ اپنے بندوں کو معافی دے رہے ہیں اور ان کی عبادات پر خوش ہو رہے ہیں ب،ندوں کو چاہئے کہ وہ ہر لمحہ اور معاملہ میں ربانی احکامات کی اسی طرح پابندی کریں جس طرح روزہ میں اس کا اہتمام کرتے تھے،یقینا عبادات واطاعت اور مکمل فرماں داری سے ہی رحمت الٰہی متوجہ ہوتی ہے،حالات بدلتے ہیں ،مصیبت راحت میں تبدیل ہوتی ہے اور دلوں کو سرور ملتا ہے ،مفتی عبدالمنعم فاروقی قاسمی نبیرہ حضرت قطب دکنؒ خطیب جامع مسجد اشرفی قلعہ گولکنڈہ حیدرآباد عید سعید کے موقع پر اپنے صحافتی بیان کے ذریعہ عالم اسلام کے مسلمانوں کو مبارک باد دی اور کہا کہ مسلمان عید سعید کے موقع پر بقیہ زندگی اطاعت وفرماں برداری کے ساتھ گزار نے کا عہد کریں،بلاشبہ اللہ کی اطاعت اور رسول اللہ ؐ کی تعلیمات پر عمل ہی میں دنیا وآخرت کی کامیابی پوشیدہ ہے ،اگر مسلمان حقیقی مؤمنانہ زندگی گزارنے لگ جائیں تو حالات خود بخود بدل جائیں گے اور کامیابی ان کے قدم چومے گی اور انہیں ان کا کھویا ہوا مقام حاصل ہوگا۔