Fri, Feb 26, 2021

*آسماں تیری لحد پہ شبنم افشانی کرے*

مفتی مرزا عابد بیگ قاسمی 
امام وخطیب مسجد علی مرتضیٰ نظام آباد

بندہ درویش, ولی کامل, خدا رسیدہ, عارف باللہ, ملی قائد, مذہبی رہنما , مستند مؤرخ, معتبر ومعروف عالم دین, بے مثال اہل قلم, ترجمان اسلام, عزم وعمل کے کوہ گراں, جرائت وعزیمت کے پہاڑ, امن و آشتی کے پیامبر, تعلیم وتربیت کے داعی, مصلح سماج, اکابرین دیو بند کے منظور نظر, قاسمیت کے ترجمان, جمعیت کے پاسبان, جلسوں اور کانفرنسوں کی زینت, اسٹیج سے گرجنے, للکارنے اور جھنجھوڑنے والے ساحراللسان خطیب, صبر وتحمل کے نمو نہ, سادگی ومتانت کے عکس جمیل, شفقت ومحبت کی تصویر, مسلسل کام کرنے اور تھک تھک کر کرتے رہنے والے عظیم مرد مجاہد, اپنے سارے اسفار کو ہمیشہ کیلئے خیر باد کہتے ہوئے آخرت کے سفر پر روانہ ہوگئے *کون -پھر ایک بار دل چاہتا ہے کہ بولوں**
کہ وہ بیک وقت قاسمی بھی, صاحب نسبت بھی, خطیب بھی, مؤرخ بھی, اہل قلم بھی, یعنی مذہب وسیاست کا حسین سنگم ایک درِ نایاب تھے, اور وہ جو تاریخ پر تاریخ رقم کرنے والے ایک انمول ہیرا تھے, اور ملت اسلامیہ کے فرد فرید اور دارالعلوم دیوبند کے فرزند ارجمند تھے وہ اب اس دنیا ئے فانی سے ابدی دنیا کی طرف رحلت فرما گئے, آپ نے میری اتنی لمبی تحریر پڑھی اس پوری *تحریر سے آپ کے ذہن ودماغ پر خوبصورت سی جو تصویر مرتب ہو اس پہ لکھ دیجئے! حضرت مولانا سید ولی اللہ صاحب قاسمی رحمۃاللہ علیہ*

*آئے مرد دانا وبینا!*
جا تونے پوری زندگی محنتوں اور کارناموں کی تاریخیں رقم کی اب اس بڑھاپے میں تو تھک چکا تھا -اب تجھے آرام کی ضرورت تھی -رب العالمین نے جمعہ کی شب تیری موت محفوظ کردیا ہے اور روز محشر تک کے لیے تجھے آرام کی نیند سونے کا سنہرا موقع بخش دیا ہے
ضلع نظام آباد اطراف واکناف کے چاہے وہ آئمہ کرام ہو یا سیاسی قائدین, چاہے وہ جمعیت کے خدام واراکین ہو یا مدارس کے نظماء ومدرسین آپ کی رحلت کو ملت اسلامیہ کے لئے عظیم خسارہ تصور کرتے ہوئے حضرت والا کو ان کے عظیم کارناموں پر انہیں خراج تحسین عقیدت پیش کرتے ہیں, ان کی بال بال مغفرت کیلئے دعاگو ہیں اور تمام احباب سے ان کے ایصال ثواب کے اہتمام کی درخواست کرتے ہیں