Thu, Feb 25, 2021

کرونـــاوائـرس کےسلسلےمیں آل انــڈیــا مسلـــم پــرسنل لابـــورڈ کی ھدایات

 

کرونا وائرس ھمارےملک میں بھی پھیل رہاہے جس کی وجہ سے لوگ پریشانی کا شکار ہیں٬ھم جس دین کوماننےوالےہیں اس نےہرطرح کےحالات کےسلسلےمیں واضح رھنمائی کی ہے٬وباؤں کےبارےمیں بھی احتیاط کی تعلیم اسلام میں موجود ہے٬حضوراکرمﷺکا ارشادہےکہ:جب تمہیں اس بات کا علم ہوکہ فلاں بستی میں طاعون (یااورکوئی وباء)پھیلی ہوئی ہےتو تم وہاں نہ جاؤاور اگر تمہاری بستی میں طاعون آجائےتو وہاں سے نہ نکلو! (صحیح بخاری شریف,حدیث نمبر,5728)
اسی طرح اسلام کی یہ بھی واضح ھدایت ہےکہ ہماری ذات سے سےکسی دوسرےکو تکلیف نہ پہونچے۔قرآن پاک میں بتایاگیاہےکہ کسی انسان کی جان بچالیناساری انسانیت کی جان بچالینے جیسا ہے (سورہ مائدہ,آیت نمبر,32)
یہ بات بھی سب کے علم میں ھے کہ اسلام پاکی٬صفائی اور پاکیزگی کا دین ہے٬دن رات میں پانچوں فرض نمازوں کےلیےوضوکرنےکا حکم دیا گیاہے٬رات کوباوضوسونااجروثواب کا ذریعہ قراردیاگیاہے٬آلودگی٬گندگی اور ناپاکی سےبچنےکی تاکیدبھی قرآن و حدیث میں باربار آئی ہے٬ اسلامی تعلیمات اور قرآن و سنت کی ھدایات کےپیش نظرکروناوائرس کےپھیلاؤکو روکنےاوراپنےآپ کو اس سے محفوظ رکھنےکےلیےدرج ذیل ھدایات جاری کی جارہی ہیں۔

۱۔ لوگ اپنے اپنے گھروں سے صابن سے ہاتھ دھو کر باوضو ہو کر سنت پڑھ کر نکلیں اور مسجدوں میں با جماعت فرض ادا کر کے گھر واپس ہو کر سنت ادا کریں۔

۲۔ فی الحال مصافحہ و معانقہ نہ کریں ۔

۳۔ کھانسی اور چھینک آتے وقت منھ پر کپڑا یا ٹشو پیپر رکھ لیں۔

۴۔وضو خانے،استنجاءخانے،نلوں کی خوب صفائی کی جائے اور لوٹوں کو مانجھ کر صاف کردیا جائے ۔

۵۔ جن لوگوں کو سردی کھانسی،بخار،بدن میں اینٹھن یا سانس کی بیماری ہو وہ گھر میں ہی نماز اد ا کیا کریں۔

۶۔مسجد انتظامیہ کو چاہئے کہ مسجد میں رکھے تولیے اور ٹوپیوں کو ہٹا لیں تاکہ لوگ ان کا استعمال نہ کریں۔

۷۔ اپنے کپڑے،بدن اور آس پاس کی صفائی اور پاکیزگی کا خیال رکھیں،صفائی اور پاکیزگی اسلام میں پسندیدہ عمل ہے اور اس کو ایمان کا جزءقرار دیا گیا ہے ۔

۸۔مسجدوں میں بچھے مصلیٰ ہٹا لیے جائیں اور اچھی طرح مسجد کے فرش کو پانی اور دوا کے ساتھ دھو دیں اور ہر جمعہ کو اسی طرح دھویا کریں۔

۹۔مسجدوں میں ہر تین صفوں کی جگہ دو صفیں بنائی جائیں۔

۱۰۔امام صاحب کو چاہئے کہ جمعہ کی تقریروں کو مختصر کریں اور اس میں رجوع الی ﷲ کی تلقین ہو، دعاء و اذکار بتائے جائیں اور لوگوں کوکورونا وائرس سے بچنے کی تدبیر بھی مختصراً بتائی جائے۔

۱۱۔ جن مساجد میں جمعہ کے دن زیادہ بھیڑ ہوتی ہے،وہاں دو دفعہ جماعت کی جا ئے،دونوں جماعتوں میں وقت کا اتنا فرق ہو کہ پہلی جماعت کے سارے نمازی مسجد سے نکل جائیں،دوسری جماعت کے امام بھی دوسرے ہوں گے ۔

۱۲۔ ہر نماز میں خصوصی طور پر ﷲتعالیٰ سے اس بیماری سے حفاظت اور این پی آر ، این آر سی کی مصیبت سے محفوظ رہنے کی دعاکریں ۔

۱۳۔ زیادہ سے زیادہ توبہ و استغفار کریں٬ﷲکے نبی صلیﷲعلیہ وسلم نے مصیبتوں کے وقت کثرت سے توبہ و استغفار کرنے کی ہدایت دی ہے ۔

آل انڈیامسلـــم پـــرسنـل لابورڈ کےجنرل سکریٹری امیرشریعت حضرت مولانا محــمــد ولی رحـــمـــــــانی صاحب دامت برکاتہم نےمسلمانان ھندسےیہ گزارش کی ہےکہ وہ ان ھدایات پر عمل کریں٬اسی طرح ائمہ کرام اور متولیان مساجد سےبھی اس سلسلےمیں خصوصی توجہ دینےکی انہوں نےاپیل کی ہے۔

🎁 سوشل میڈیا ڈیسک آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ
http://wa.me/+919834397200